Masihi Shayari - PROMOTING MASIHI SHAYARI
Download Urdu Font

Tajasam-E-Masiha | تجسم مسیحا

( 1 Vote )

Aaj charni mein utara hi Ibn-e-Khuda
Dekho Kalma-e-Khuda hi mujasam hua

Dekh ker asiyon ke ran-o-alam
Agaya hi bachanay ko khud hi Khuda

Jo maidaan mein gadariay thay soay huay
Ik farishtah unko dia hi jaga

Dekho Munaji jahan ka hi peda hua
Woh hai charni mein kapray mein lipta hua

Jo majousi thay bhatkay huay rah se
Eik sitaray ne diya unko rasta dikha

Gir ke sijdah mein kertay tahaif ko paish
Jo saheefon mein tha aaj poora hua

Yesu aaye jahan mein bachanay humein
Dekho noor-e-sehar ab shuru hi hua

Jo bhi laye emaan, paye abdi nijaat
Woh hai chashma-e-hayat jo jaari hua

Ao Yesu ke pas pao hayat
Har bashar keliye dar khula hi hua

Jo hai peda hua woh hi mera Khuda
Kesi Us ka karam aj Gill peh hua

آج چرنی میں اُترا ہے ابنِ خُدا
دیکھو کلمہِ خُدا ہے مُجسم ہوا

دیکھ کر عاصیوں کے رنج و الم
آگیا ہے بچانے کو خد ہی خُدا

جو میدان میں گڈرئیے تھے سوئے ہوئے
اک فرشتہ ان کو دیا ہے جگا

دیکھو مُنّجی جہاں کا ہے پیدا ہوا
وہ ہے چرنی میں کپٹرے میں لپٹا ہوا

جو مجوسی تھے بھٹکے ہوئے راہ سے
اک ستارے نے دیا اُنکو رستہ دکھا

گِر کے سجدہ میں کرتے تحائف وہ پیش
جو صحیفوں میں  تھا آج پورا ہوا

یسوع آئے جہاں میں بچانے ہمیں
دیکھو نور ِ سحر اب شروع ہے ہوا

جو بھی لائے ایمان، پائے ابدی نجات
وہ ہے چشمہِ حیات جو جاری ہوا

آئو یسوع کے پاس پائو ابدی حیات
ہر بشر کیلئے در کھُلا ہے ہوا

جو ہے پیدا ہوا وہ ہے میرا خُدا
کیسا اُس کا کرم آج گِل پہ ہوا

© Younis Gill 2009

Add comment


Security code
Refresh

Login Form