Masihi Shayari - PROMOTING MASIHI SHAYARI
Download Urdu Font

Zra Khayal Kero |ذرا خیال کرو

( 1 Vote )

Dor-e-hazir dor-e-akheer hua jata hi
Shareer aur bhi shareer hua jata hi

Yeh kal o zalzalay jahan ki siyasatein
Yahan jeena bara ghambeer hua jata hi

Sitaray khoon ke qatron ka samaa lagtay hain
Falak peh surakh koi naeer hua jata hi

Nishan-e-Amad-e-Sani Masiha ka dekho
Koi awal koi akheer hua jata hi

Zara see der baki hi zara khayal kero!
Naya Jerusalem tameer hua jata hi

Ajeeb takhleeq hon mein bhi Khuda ke hathon ki
Mere hathon se woh tehreer hua jata hi

Mere umeed bharosah mere ulfat hi woh
Mera Yessu mere jageer hua jata hi

دورِ حاضر دورِ اخیر ہُوا جاتا ہے
شریر اور بھی شریر ہوا جاتا ہے

یہ کال و زلزلے جہان کی سیاستیں
یہاں جینا بڑا گھمبیر ہُوا جاتا ہے

ستارے خون کے قطروں کا سماں لگتے ہیں
فلک پہ سُرخ کوئی نیّر ہُوا جاتا ہے

نشانِ آمدِ ثانی مسیحا کا دیکھو
کوئی اول کوئی اخیر ہُوا جاتا ہے

ذرا سی دیر باقی ہے ذرا خیال کرو!
نیا یروشلیم تعمیر ہُوا جاتا ہے

عجیب تخلیق ہُوں میں بھی خُدا کے ہاتھوں کی
میرے ہاتھوں سے وہ تحریر ہُوا جاتا ہے

میری امید بھروسہ میری اُلفت ہے وہ
میرا یسوع میری جاگیر ہُوا جاتا ہے

© 2011 Tahir Masih

Login Form