Masihi Shayari - PROMOTING MASIHI SHAYARI
Download Urdu Font

Yesu Ke Qadam | یسوع کے قدم

( 3 Votes )

Kash ke mein bhi Yesu ke qadmon mein hota

Choota, ankhon se choomta, ansuon se dhota

 

Yahi qadam jo keh naqsh doam hain sab ke liye

Inhi qadmon talay rehta, in ki khaak mein hota

 

Na daein murta, na baein, barhta rehta sada hi

Ouske logon ke sang pechay rawan mein hota

 

Fikron ghamon museebaton se azadi unke sabab

Dunya janti hai yeh, lazim tha keh yeh jana mein hota

 

Ao agay barho, door kharay kyoun taktay ho unko

Tariq tu khaak bana in ki kash ban gaya mein hota

کاش کہ مَیں بھی یسُوع کے قدموں میں  ہوتا
چھُوتا، آنکھوں سے چُومتا، آنسووں سے دھوتا

 

یہی قدم جو کہ نقشِ دوام  ہیں سب کے لئے
اِنہی قدموں تلے رہتا، اِن کی خاک مَیں ہوتا

 

 

نہ دایئں مُڑتا،  نہ بایئں،   بڑھتا رہتا  سدا ہی
اُسکے لوگوں کے سنگ  پِیچھے  رواں مَیں ہوتا

 

فِکروں غموں مُصِیبتوں سے آزادی  انکے سبب
دُنیا جانتی ہے یہ ، لازم تھا کہ یہ جانا مَیں ہوتا

 

 

آو آگے بڑھو، دُور کھڑے  کیوں تکتے ہو اِنکو
طارق تو خاک بنا اِن کی کاش بن گیا مَیں ہوتا

© 2012 Samson Tariq

Add comment


Security code
Refresh

Login Form