Masihi Shayari - PROMOTING MASIHI SHAYARI
Download Urdu Font

Tera Kalam Zindagi | تیرا کلام زندگی

( 13 Votes )

Kalam se bahar jaon kesay
Tera kalam zindagi hi mere
Rah ki roshni hi yeh
Isi se agahi hi mere

Mukjasam hua jab yeh Kalam
Meray Yesu ki soorat mein
Arsh chorh farsh per aya
Hua woh mukhlasi hai mere

Korrhon se mar khai bohat
Moun per bhi thukwaya usnay
Pasli mein nezah bhi khaya
Dukhon se shnasi hi mere

Calvary per masloob hua jab
Moat per fateh pa ke
Kabar se jee utha tab
Bana woh bandagi hi mere

Uski hamd ke liye faqat
Uski sana ke liye hamesha
Likhta rahoon Tariq likhta rahon
Jab tak zindagi hi mere

کلام سے باہر جائوں کیسے
تیرا کلام زندگی ہے میری
راہ کی روشنی ہےیہ
اِسی سے آگہی ہے میری

مُجسم ہُوا جب یہ کلام
میرے یسوع کی صُورت میں
عرش چھوڑ فرش پر آیا
ہُوا وہ مُخلصی ہے میری

کوڑوں سے مار کھائی بُہت
مُنہ پر بھی تھُکوایا اُسنے
پسلی میں نیزہ بھی کھایا
دُکھوں سے شناسی ہے میری

کلوری پر مصلُوب ہوا جب
موت پر فتح پا کے
قبر سے جی اُٹھا تب
بنا وہ بندگی ہے میری

اُسکی حمد کے لیئے فقط
اُسکی ثنا کے لیئے ہمیشہ
لکھتا رہوں طارق لکھتا رہوں
جب تک زندگی ہے میری

© 2010 Samson Tariq

Comments  

 
0 #1 gulzar 2013-06-02 16:50
hi
Quote
 
 
0 #2 BHW 2017-04-16 05:29
I enjoy, lead to I discovered exactly what I was
taking a look for. You've ended my four day long
hunt! God Bless you man. Have a great day. Bye
Quote
 

Add comment


Security code
Refresh

Login Form