Masihi Shayari - PROMOTING MASIHI SHAYARI
Download Urdu Font

Ghamgeen-o-Ranjoor | غمگین و رنجور

( 1 Vote )

Ghamgeen o ranjoor

 

Masmar kernay walay bhi masmar hongay

Aaj nahi to kal hoga zaroor, jo fasal bota hi wohi kat-ta hai

 

Mit jata hi takabar, sheikhi-o-gharoon

Cheen lita hi jo kamzoron ki poonji aasra ya ashiyana, woh hai zalim-o-fajoor

 

Shayad woh taqat ke nashay mein ho ya phir maey ka charha ho saroor

Charchon, idaron ke aye din masmari per Masihon ka bacha bacha hi ghamgeen-o-ranjoor

غمگین و رنجور

مسمار کرنے والے بھی مسمار ھونگے
آج نہیں تو کل ھو گا ضرور

جو فصل بوتا ھے وھی کاٹتا ھے
مٹ جاتا ھے تکبر، شیخی و غرور

چھین لیتا ھے جو کمزوروں کی پونجی
آسرا یا آشیانہ، وہ ھے ظالم و فجؤر

شاید وہ طاقت کے نشے میں ھو
یا پھر مے کا چڑھا ھو سرور

چرچوں، اداروں کی آے دن مسماری پر
مسیحیوں کا بچہ بچہ ھے غمگین و رنجور
© 2012 Samson Tariq

Comments  

 
0 #1 Samson Tariq 2012-02-28 05:54
غمگین و رنجور

مسمار کرنے والے بھی مسمار ھونگے
آج نہیں تو کل ھو گا ضرور

جو فصل بوتا ھے وھی کاٹتا ھے
مٹ جاتا ھے تکبر، شیخی و غرور

چھین لیتا ھے جو کمزوروں کی پونجی
آسرا یا آشیانہ، وہ ھے ظالم و فجؤر

شاید وہ طاقت کے نشے میں ھو
یا پھر مے کا چڑھا ھو سرور

چرچوں، اداروں کی آے دن مسماری پر
مسیحیوں کا بچہ بچہ ھے غمگین و رنجور
Quote
 

Add comment


Security code
Refresh

Login Form