Masihi Shayari - PROMOTING MASIHI SHAYARI
Download Urdu Font

Aj Phir Calvary Ki Rah | آج پھر کلوری کی راہ

( 2 Votes )

1 Aaj phir se kalvari ki rah pe gulshan khila
Nasri ke tan ka ghao phir se khil utha

2 kaisi kaisi noh ke gul lehlehatay hein wahan
qatra qatra jis jagah pe Nasri ka khon gira

3 Eden mein us ne bashar ki barhangi ba parda ki
iss jahan mein perhan us ka magar banta gya

4 Ehtajajan monh chupaya arz se khurshid ne
tirgi mein kar rahi hai sahar-e-noh us ki zia

5 Us k hathon ka limas kitnay hi marzon ki dawa
Nasri k lubb hilay to pa gaey kitnay baqa


6 Taj kanton ka aziat us ko pohnchata raha
Jaan kani ki kaifiat mein wo duwa karta raha

آج پھر سے کلوری کی راہ پہ گُلشن کھِلا
ناصری کے تن کا گھائو پھر سے کھِل اُٹھا

کیسی کیسی نوح کےگُل لہلہاتے ہیں وہاں
قطرہ قطرہ جس جگہ پہ ناصری کا خون گرا

عدن میں اُس نے بشر کی برہنگی باپردہ کی
اِس جہاں مِیں پرہن اُس کا مگر بانٹا گیا

احتجاجآ مُنہ چھُپایا ارز سے خوشید نے
تیرگی میں کر رہی ہے سحر و نوح اُس کی ضیا

اُس کے ہاتھوں کا لمس کِتنے ہی مرضوں کی دوا
ناصری کے لب ہِلے تو پا گئے کتنے بقٓا

تاج کانٹوں کا اذیت اُس کو پہنچاتا رہا
جان کنی کی کیفیت میں وہ دُعا کرتا رہا

© 2010 Amer Zareen

Add comment


Security code
Refresh

Login Form